سب کے لیے حفظان صحت کا اقوام متحدہ کا منصوبہ

نائیجریا میں سکول کی لڑکیاں ٹوائلٹ استعمال کرتے ہوئے۔
© UNICEF/Adzape
نائیجریا میں سکول کی لڑکیاں ٹوائلٹ استعمال کرتے ہوئے۔

سب کے لیے حفظان صحت کا اقوام متحدہ کا منصوبہ

صحت

19 نومبر کے ورلڈ ٹوائلٹ ڈے سے پہلے اقوام متحدہ کا چلڈرن فنڈ (یونیسف) ایک نیا تدبیراتی منصوبہ شروع کر رہا ہے جس کا مقصد حکومتوں کو اپنے لوگوں کے لیے نکاسی آب کے محفوظ انتظام میں مدد دینا اور پائیدار ترقی کے اہداف (ایس ڈی جی) میں نکاسی آب کے حوالے سے دیے گئے ہدف کو حاصل کرنا ہے۔

یونیسف میں 'واش' پروگرام ڈویژن کے شعبہ نکاسی آب اور صحت و صفائی کی ٹیم لیڈر این تھامس نے جمعرات کو اقوام متحدہ کے ہیڈکوارٹر میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ''ایس ڈی جی 6.2 کا مقصد کُھلے میں رفع حاجت کو ختم کرنا اور محفوظ نکاسی آب اور صحت و صفائی کی سہولیات تک رسائی مہیا کرنا ہے اور یہ پائیدار ترقی کے تمام اہداف میں تاحال سب سے پرے ہے اور اس کے لیے مہیا کیے جانے والے مالی وسائل بھی دیگر اہداف کے مقابلے میں سب سے کم ہیں۔''

Tweet URL

'نکاسی آب کا بحران'

2020 میں قائم کردہ اندازے کے مطابق 3.6 ارب لوگوں کے پاس نکاسی آب کی محفوظ خدمات کا فقدان ہے۔ این تھامس کا کہنا تھا کہ 2030 تک نکاسی آب کی محفوظ خدمات تک عالمگیر رسائی ممکن بنانے کے لیے اس شعبے کو مہیا کیے جانے والے مالی وسائل کو چار گنا بڑھانا ہو گا۔ انہوں ںے کہا کہ اس حوالے سے موجودہ صورتحال ''نکاسی آب کے بحران'' کی حیثیت رکھتی ہے جس سے خواتین اور بچے خاص طور پر متاثر ہو رہے ہیں۔

2022 تا 2030 محفوظ نکاسی آب تک رسائی کے منصوبے کی بدولت شراکت داروں کے تعاون سے براہ راست اور بالواسطہ مدد کے ذریعے ایک ارب لوگوں کو نکاسی آب کی محفوظ خدمات مہیا کی جائیں گی۔

یو این۔واٹر کے نائب چیئرمین جوناس کَلمین نے بھی پریس کانفرنس سے خطاب کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ پانی کے امور پر اس عالمی ادارے کا بین الاداری رابطوں کا طریق کار ناقص نکاسی آب کو ''تکنیکی مسئلے کے بجائے سیاسی ارادے کا مسئلہ'' قرار دیا ہے۔ انہوں نے زور دیا کہ ٹیکنالوجی موجود ہے اور حکومتوں کو نکاسی آب پر مالی وسائل خرچ کرنا ہوں گے۔

ممنوعہ بات چیت

دونوں مقررین کا کہنا تھا کہ نکاسی آب پر ہونے والی تمام بات چیت ایک ''ممنوعہ'' اور ''پوشیدہ'' موضوع  رہی ہے۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ یہ مسئلہ سیاست دانوں کے روبرو شدومد سے اٹھایا جانا چاہیے تاکہ مناسب نکاسی آب تک ہر ایک کی رسائی یقینی بنائی جا سکے۔

زیرزمین پانی سے متعلق 7 تا 8 ستمبر پیرس میں ہونے والی یو این۔واٹر کانفرنس اور 22 تا 24 مارچ 2023 اقوام متحدہ کی پانی سے متعلق کانفرنس میں ان موضوعات پر بات کی جائے گی۔

نمایاں پیغام

18 نومبر کو اقوام متحدہ کے ہیڈکوارٹر میں ربڑ کا ایک بہت بڑا ہوا بھرا بیت الخلا کا نمونہ دن بھر توجہ کا مرکز ہو گا۔ یہ بیت الخلا آخری مرتبہ 2019 میں دیکھا گیا تھا۔

اسی دن یونیسف '2030 تک نکاسی آب تک رسائی کی رفتار بڑھانے' کے عنوان سے ایک اجلاس کا انعقاد کرے گا جس میں مقررین 2023 میں اقوام متحدہ کی پانی سے متعلق کانفرنس کے تناظر میں نکاسی آب اور پانی سے جڑے اہم مسائل پر بات کریں گے۔

ورلڈ ٹوائلٹ ڈے